امریکا وسط مدتی انتخابات،ٹرمپ کی پارٹی کو دھچکا، ڈیموکریٹس کو واضح برتری حاصل

share with us

واشنگٹن:07؍نومبر2018(فکروخبر/ذرائع)امریکا میں وسط مدتی انتخابات کے موقع پر تمام ریاستوں میں پولنگ کا وقت ختم ہوگیاجس کے بعد ابتدائی نتائج میں کہاگیا ہے کہ ڈیموکریٹس کو واضح برتری حاصل ہے اور ایوان نمائندگان میں انہوں نے19 نشستیں ری پبلکنز سے چھین لی ہیں تاہم435 میں سے181 نشستوں پرری پبلکنز اور 209 پر ڈیمو کریٹس کو برتری حاصل ہے،سینیٹ میں 50 نشستوں کے ساتھ ری پبلکنز کو واضح سبقت حاصل ہے جبکہ ڈیموکریٹس کو 42 نشستیں مل سکیں اسی طرح امریکی ریاستوں کے50 میں سے36 گورنروں کاانتخاب بھی ہوا جس میں سے ڈیموکریٹس نے ری پبلکنز سے گورنر کی 3 نشستیں بھی چھین لیں جس کے بعد ری پبلکنز کے گورنرز کی تعداد 21 اور ڈیموکریٹس گورنرز کی تعداد 18 ہو گئی،دوسری جانب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے انتخابات میں کامیابی پر امریکی عوام سے اظہار تشکر کیا ہے،امریکی الیکشن کے دوران ووٹ کے حق سے متعلق تنظیموں کو 10 ہزار شکایات موصول ہوئی ہیں۔امریکی ٹی وی کے مطابق ذرائع نے بتایاکہ 435 میں سے181 نشستوں پرری پبلکنز اور 209 پر ڈیمو کریٹس کو برتری حاصل ہے۔سینیٹ میں 50 نشستوں کے ساتھ ری پبلکنز کو واضح سبقت حاصل ہے، جبکہ ڈیموکریٹس کو اب تک 42 نشستیں ملی ہیں۔امریکی ریاستوں کے50 میں سے36 گورنروں کاانتخاب بھی ہوا جس میں سے ڈیموکریٹس نے ی پبلکنز سے گورنر کی 3 نشستیں بھی چھین لیں جس کے بعد ری پبلکنز کے گورنرز کی تعداد 21 اور ڈیموکریٹس گورنرز کی تعداد 18 ہو گئی۔دوسری جانب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے انتخابات میں کامیابی پر امریکی عوام سے اظہار تشکر کیا ہے۔امریکی الیکشن کے دوران ووٹ کے حق سے متعلق تنظیموں کو 10 ہزار شکایات موصول ہوئی ہیں۔واضح رہے کہ ایوان نمائندگان میں اکثریت کے لیے کسی بھی جماعت کو 218 نشستیں درکار ہیں، حکمراں جماعت ری پبلکنز ایوان نمائندگان میں برتری برقرار رکھ سکے گی یا نہیں؟وسط مدتی انتخابات کو امریکی صدر ٹرمپ کا امتحان اور ان کی پالیسیوں پر ریفرنڈم بھی کہا جا رہا ہے۔

Prayer Timings

Fajr فجر
Dhuhr الظهر
Asr عصر
Maghrib مغرب
Isha عشا