مصر:فوجیوں کے قتل کے جرم میں 8 جنگجوؤں کو سزائے موت

share with us


سزائے موت پانے والے عسکریت پسندوں کا تعلق داعش سے وابستہ گروپ "ولایت سینا" سے ہے


قاہرہ:08؍نومبر2018(فکروخبر/ذرائع)مصر کی ایک فوجی عدالت نے فوجیوں کے قتل الزمات میں مقدمات کا سامنا کرنے والے 8 جنگجوؤں کو سزائے موت کا حکم دیا ہے۔ سزائے موت پانے والے عسکریت پسندوں کا تعلق داعش سے وابستہ گروپ "ولایت سینا" سے ہے اوران پر دہشت گردی کی کارروائیوں میں متعدد فوجیوں کو ہلاک اور زخمی کرنے کا الزام عاید کیا جاتا ہے۔مصری حکام کا کہنا ہے کہ فوجیوں کیقتل کے واقعات سنہ 2016 کے ہیں۔ دہشت گردوں نے فوجیوں کی گاڑیوں پر گھات لگا کر حملہ کیا جس کے نتیجے میں متعدد فوجی ہلاک ہوگئے تھے۔عدالتی حکام کا کہنا ہے کہ عسکریت پسندوں پر ان کی عدم موجودگی میں مقدمہ چلایاگیا اور سزا سنائی گئی۔ اسماعیلیہ گورنری کی ایک فوجی عدالت نے 32 ملزمان کو عمرقید اور 2 ملزمان کو 15 سال قید با مشقت کی سزا سنائی۔ اس عدالت نیدو ملزمان کو بری کردیا۔ملزمان فوجی عدالتوں کی طرف سے سنائی گئی سزاؤں کو سپریم کورٹ میں چیلنج کرسکتے ہیں۔مصر میں گذشتہ کچھ عرصے کے دوران فوجی عدالتوں سے سیکڑوں افراد کو سنگین نوعیت کی سزائیں دی گئیں۔ انسانی حقوق کی تنظیموں نے شہری مقدمات کو فوجی عدالتوں کے ذریعے نمٹانے کی شدید مذمت کی ہے۔

 

Prayer Timings

Fajr فجر
Dhuhr الظهر
Asr عصر
Maghrib مغرب
Isha عشا