صحافی جمال خاشقجی کے بچوں کا سعودی عرب سے والد کی لاش کی حوالگی کا مطالبہ

share with us

نیویارک:05؍نومبر2018(فکروخبر/ذرائع) سعودی صحافی جمال خاشقجی کے صاحبزادوں نے سعودی عرب سے اپیل کی ہے کہ والد کی لاش ان کے حوالے کردی جائے۔امریکی نشریاتی ادارے سی این این کو انٹرویو دیتے ہوئے عبداللہ اور صلاح خاشقجی نے کہا کہ ان کے والد کے لاپتہ ہونے اور قتل ہونے کے حوالے سے غیریقینی صورتحال نے انہیں چند ہفتے شدید اذیت اور تکلیف میں مبتلا کیے رکھا۔

33 سالہ عبداللہ خاشقجی نے کہا کہ ان کے والد کے ساتھ جو کچھ ہوا، امید ہے کہ وہ تکلیف دہ نہیں ہوگا، جو کچھ ہوا وہ بہت جلد ہوا ہوگا اور ان کی پرسکون موت واقع ہوئی ہوگی۔35 سالہ صلاح خاشقجی کا کہنا تھا کہ وہ چاہتے ہیں کہ ان کے والد کی تدفین مدینہ منورہ کے قبرستان جنت البقیع میں کی جائے اور اس حوالے سے سعودی حکام سے بات کی ہے اور امید ہے کہ ایسا جلد ہوگا۔

دونوں بھائیوں کا کہنا ہے کہ ان کے والد کو سیاسی مقاصد کے لیے عالمی سطح پر غلط انداز میں پیش کیا گیا اور بدقسمتی سے کچھ لوگ ان کے حوالے سے من گھڑت باتیں کر رہے ہیں اور ان کا نام سیاست کے لیے استعمال کر رہے ہیں تاہم سعودی کنگ نے انصاف کی فراہمی کا کہا ہے جس پر ہمیں یقین ہے۔

یاد رہے کہ سعودی صحافی جمال خاشقجی 2 اکتوبر کو دستاویزات کے سلسلے میں ترکی کے شہر استنبول میں واقع سعودی قونصلیٹ گئے تھے جس کے بعد سے لاپتہ ہیں۔

Prayer Timings

Fajr فجر
Dhuhr الظهر
Asr عصر
Maghrib مغرب
Isha عشا