اترپردیش : لکھنو آگرہ ایکسپریس وے تیز رفتار بس نے طلباءکو کچلا ، 7 بچوں کی موت

share with us

کنوج:11؍جون2018(فکروخبر/ذرائع) اتر پردیش کے کنوج ضلع میں آگرہ - لکھنؤ ا کسپریس وے پر ہوئے ایک دردناک حادثے میں 7 بچوں کی موت ہو گئی۔اطلاعات کے مطابق تین بچوں کی حالت بے حد نازک ہے۔ جن کا علاج جاری ہے۔اس حادثے میں 9 بچوں میں سے 6 کی موقع پر ہی موت ہو گئی جبکہ ایک کی موت ہسپتال لے جاتے وقت راستے میں ہی ہوگئی۔ 3 بچوں کو ضلع اسپتال پہنچایا گیا۔ ان کی حالت ابھی بھی نازک بتائی جا رہی ہے۔ ذرائع کے مطابق یوپی روڈ ویز کی بس نے 9 اسکولی بچوں کو کچل دیا۔ یہ حادثہ کنوج ضلع کے تال گرام تھانہ علاقے میں پیش آیا ہے۔وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ نے ہلاک شدہ بچوں کے اہل خانہ کو 2-2 لاکھ روپے بطور معاوضہ ادا کرنے کا اعلان کیا ہے۔ حادثے کے بعد روڈ ویز کا ڈرائیور بس چھوڑ کر فرار ہو گیا۔  موصولہ اطلاعات کے مطابق سنت کبیر نگر سے بی ٹی سی کے طلباء سے بھری بس ٹور پر ہری دوار جارہی تھی۔ راستے میں بس کا ڈیزل ختم ہوگیا اور گاڑی بند ہوگئی۔ ڈرائیور نے طلباء کو اس کی اطلاع دی۔ طلباء نے ایک دوسری ٹور بس سے ڈیزل نکال کر اس بس میں ڈال رہے تھے کہ روڈ ویز کی ایک دوسری بس انہیں کچل کر نکل گئی جس کی زد میں آنے سے 6 طلباء موقع پر ہی ہلاک جبکہ ایک نے راستے میں دم توڑ دیا۔  خبر لکھے جانے تک بچوں کی شناخت منظر عام پر نہیں لائی گئی تھی۔ 
 

Prayer Timings

Fajr فجر
Dhuhr الظهر
Asr عصر
Maghrib مغرب
Isha عشا