سعودی عرب؛عسکری سازوسامان کی ملک میں تیاری سے 33 ارب ریال کی بچت ہو گی

share with us

ریاض:03؍مارچ2018(فکروخبر/ذرائع)  سعودی وزارت دفاع میں مقامی عسکری صنعت کو سپورٹ کرنے والے شعبے کے ڈائریکٹر بریگیڈیئر جنرل عطیہ المالکی کا کہنا ہے کہ سعودی عرب کے عسکری اخراجات کے 50 فیصد حصّے کی لوکلائزیشن کے نتیجے میں مملکت کو 32.5 ارب ریال کی بچت متوقع ہے،بچت کی اس خطیر رقم کو معیشت کے لیے استعمال کیا جائے گا۔ہفتہ کو ڈائریکٹر بریگیڈیئر جنرل عطیہ المالکی نے نجی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ مملکت میں عسکری صنعت کی سپورٹ کے لئے مسلح افواج کی نمائش میں مقامی کمپنیوں اور عالمی کمپنیوں کے درمیان مجموعی طور پر 33 معاہدوں اور مفاہمتی یادداشتوں کے طے پانے کی امید ہے،

ان میں 15 معاہدوں پر دستخط ہو چکے ہیں۔سعودی میڈیا رپورٹس کے مطابق انہوں نے اس امر کی تصدیق کی کہ عسکری شعبے میں فاضل پرزہ جات اور دیگر ساز و سامان کی تیاری کے حوالے سے سرماریہ کاری کے مواقع سے فائدہ اٹھانے کے لیے تقریبا 800 سعودی کارخانوں نے درخواستیں پیش کی ہیں،مذکورہ نمائش میں 68 سے زیادہ عالمی کمپنیاں شریک ہیں جن کا تعلق یورپ، امریکا، ترکی، کوریا، چین اور دیگر ممالک سے ہے۔یہ کمپنیاں سعودی عرب کے مقامی مواد کے استعمال کے مقصد سے مقامی کارخانوں کے ساتھ شراکت داری پر خصوصی توجہ دے رہی ہیں۔

Prayer Timings

Fajr فجر
Dhuhr الظهر
Asr عصر
Maghrib مغرب
Isha عشا